نماز جنازہ حاضر و غائب

نمازِ جنازہ حاضر و غائب

نوٹ :حضور انور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز نے 14؍مارچ2020ء کے بعد 02؍جون 2021ء کو اسلام آباد میں نمازِ جنازہ حاضر پڑھائی۔

مکرم منیر احمدجاوید صاحب پرائیویٹ سیکرٹری اطلاع دیتے ہیں کہ 02؍ جون 2021ء کو 12 بجے صبح  اسلام آباد (ٹلفورڈ) میں اپنے دفتر کے باہر تشریف لا کر حضرت خلیفۃ المسیح الخامس ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز نےمکرمہ عائشہ بیگم صاحبہ اہلیہ مکرم محمد علی صاحب (اسلام آباد۔یوکے)کی نمازِ جنازہ حاضر اور30؍مرحومین کی نماز جنازہ غائب پڑھائی۔

نمازِ جنازہ حاضر

مکرمہ عائشہ بیگم صاحبہ اہلیہ مکرم محمد علی صاحب (اسلام آباد۔یوکے)

28؍ مئی 2021ءکو 95 سال کی عمر میں بقضائے الٰہی وفات پا گئیں اِنَّالِلّٰہِ وَ اِنَّا اِلَیْہِ رَاجِعُوْنَ۔آپ مکرم عزیز احمد صاحب (کارکن مرزا شریف احمد فاؤنڈیشن۔ اسلام آباد۔ یوکے ) کی والدہ تھیں۔ صوم وصلوٰۃ کی پابند، نیک، ہمدرد، مہمان نواز اور ایک مخلص باوفابزرگ خاتون تھیں۔مرحومہ موصیہ تھیں۔

نماز جناز ہ غائب

1۔مکرم محمد انور چیمہ صاحب ابن مکرم عطاء محمد صاحب(آف کھیوے والی۔وزیر آباد۔ حال ربوہ)

30 نومبر 2020ء کو وفات پاگئے۔2002ءمیں ریٹائرمنٹ کے بعد زندگی وقف کی اور حضورانور کی منظوری سے طاہر ہومیوپیتھک کلینک اور دارالصناعہ میں کئی سال خدمت کی توفیق پائی۔آپ مکرم حافظ باسل احمد چیمہ صاحب (مربی سلسلہ۔ استاد جامعہ احمدیہ ربوہ ) کے والد تھے۔

-2عزیزم نابغ احمد(کینیڈا)

نومبر2020ء میں وفات پاگئے۔ہیومینٹی فرسٹ اورخدام الاحمدیہ میں رضاکارانہ خدمت کی توفیق پائی۔

-3مکرم منظور احمد صاحب ابن مکرم رشید احمد صاحب(دارالصدر غربی قمر ربوہ)

یکم دسمبر 2020ءکو وفات پاگئے۔مرحوم نے تقریباً 20سال مسجد قمر میں خادم مسجد کے طور پر خدمت کی توفیق پائی۔ مرحوم موصی تھے۔

-4مکرم ملک محمد یوسف صاحب ابن مکرم ملک احمد صاحب(دارالرحمت وسطی ربوہ)

2دسمبر 2020ء کو بقضائے الہٰی وفا ت پاگئے۔مرحوم موصی تھے۔فضل عمر ہسپتال میں 28 سال بطور ڈرائیور ملازمت کرتے رہے۔

-5مکرمہ نذیر بیگم صاحبہ اہلیہ مکرم چودھری محمد ابراہیم صاحب مرحوم (سڈنی۔آسٹریلیا)

3 دسمبر 2020ء کو وفات پاگئیں۔مرحومہ موصیہ تھیں۔

-6مکرمہ رشیدہ رانا صاحبہ اہلیہ مکرم محمد انور رانا صاحب(جلنگھم۔یوکے)

5دسمبر 2020ء کو وفات پاگئیں۔مکرم خلیفہ فلاح الدین صاحب کی کزن اور مکرم سلیم الدین صاحب( نائب سیکرٹری خارجہ یوکے) کی ساس تھیں۔

-7مکرم مہر منیر اختر کملانہ صاحب ایڈووکیٹ (بستی وریام ضلع جھنگ۔حال یوکے)

6دسمبر2020ء کو وفات پاگئے۔مرحوم موصی تھے۔

-8مکرم چوہدری بشیر احمد صاحب ابن مکرم چوہدری رحمت علی صاحب(بہاولپور۔حال یوکے)

10 دسمبر 2020ء کو وفات پاگئے۔مرحوم موصی تھے۔ بہاولپور میں مقامی جماعت کے صدر کے طور پر خدمت کی توفیق پائی۔ مرحوم موصی تھے۔

-9مکرم حمید احمد صاحب ابن مکرم غلام محمد صاحب(نصیر آباد رحمٰن ربوہ)

13 دسمبر 2020ء کو وفات پاگئے۔مکرم حافظ عبدالمجید طاہر صاحب مربی سلسلہ نظارت دعوت الی اللہ کے والد تھے۔

-10مکرم قاضی محمد اجمل صاحب ا بن مکرم قاضی محمد اسلم صاحب مرحوم(جرمنی)

17 دسمبر 2020ء کو وفات پاگئے۔جماعت اسلام آباد میں مختلف عہدوں پر خدمت کی توفیق پائی۔

-11مکرم عبد السمیع قریشی صاحب ابن مکرم قریشی عبدالغنی صاحب(ایسٹ ہیم۔یوکے)

18 دسمبر 2020ء کو وفات پاگئے۔مرحوم موصی تھے۔مکرم صفدر حسین عباسی صاحب ( کارکن رقیم پریس۔یوکے) کے ماموں تھے۔

-12مکرم میاں عبد الحئی صاحب(کینیڈا)

20 دسمبر 2020ءکو وفات پاگئے۔مرحوم موصی تھے۔

-13مکرم قریشی محمد الیاس احمد صاحب ابن مکرم قریشی عباس علی خان صاحب(ناظم آباد کراچی)

24 دسمبر 2020ء کو وفات پاگئے۔سیکرٹری امور عامہ ضلع کراچی کے علاوہ متفرق عہدوں پر خدمت کی توفیق پائی۔

-14مکرمہ نرملا بیگم صاحبہ اہلیہ مکرم عبدا لسلام صاحب مرحوم(قادیان)

26 دسمبر 2020ء کو وفات پاگئیں۔مرحومہ موصیہ تھیں۔

-15مکرم محمد سیف خان صاحب(صدر جماعت سمور وسابق امیر ضلع فتح پور۔صوبہ یوپی۔انڈیا)

29 دسمبر 2020ء کو وفات پاگئے۔ آپ مکرم محمد نسیم خان صاحب( وکیل التبشیر وایڈمنسٹریٹر نور ہسپتال قادیان) کے والد تھے۔ مرحوم موصی تھے۔

-16مکرم محمد انور شاہد صاحب معلم سلسلہ ابن مکرم محمد شفیع صاحب(کوٹلی آزاد کشمیر)

30 دسمبر 2020ء کووفات پاگئے۔مرحوم موصی تھے۔

-17مکرمہ عطیہ ظفر صاحبہ (قادیان )

یکم فروری 2021ء کو وفات پا گئیں۔ مرحومہ مکرم طاہر احمدصاحب سلیجہ (مربی سلسلہ ) اورمکرم تبریز احمد صاحب سلیجہ (مربی سلسلہ و استاد جامعہ احمدیہ۔ قادیان) کی والدہ تھیں۔ مرحومہ موصیہ تھیں۔

-18مکرمہ رشیدہ بیگم صاحبہ اہلیہ مکرم مولوی محمد جمیل صاحب( واقف زندگی۔ربوہ )

9 مارچ 2021ءکو وفات پا گئیں۔مرحومہ موصیہ تھیں۔آپ مکرم وحید احمد صاحب( کارکن الفضل انٹرنیشنل لندن) کی خالہ اور خوش دامن تھیں۔مرحومہ موصیہ تھیں۔

-19مکرمہ طاہرہ ملک صاحبہ اہلیہ مکرم ملک منور احمد صاحب مرحوم (گوجرانوالہ)

13 اپریل 2021ءکووفات پا گئیں۔ گوجرانوالہ میں مقامی سطح پر صدر لجنہ کے علاوہ مختلف عہدوں پر خدمت کی توفیق پائی۔

-20مکرمہ صغریٰ بیگم صاحبہ اہلیہ مکرم عبدا لرزاق صاحب شہید (امیر ضلع نواب شاہ )

28 اپریل 2021ءکو وفات پا گئیں۔مرحومہ موصیہ تھیں۔آپ مکرم بہزاد احمد چوہدری صاحب ( مربی سلسلہ۔ نیشنل شعبہ تربیت ورشتہ ناطہ جرمنی ) کی نانی تھیں۔مرحومہ موصیہ تھیں۔

-21مکرم سردار احمد صاحب ابن مکرم سعید احمد صاحب( واقف زندگی۔ معلم سلسلہ جماعت صالح نگر ضلع آگرہ)

یکم مئی 2021ءکو وفات پا گئے۔آپ کا عرصہ خدمت 20 سال پر محیط ہے۔مرحوم موصی تھے۔

-22مکرم ملک عبد الرشید صاحب (جرمنی)

3مئی2021ءکو وفات پا گئے۔مرحوم موصی تھے۔ کراچی اور جرمنی میں مختلف عہدوں پر خدمت کی توفیق پائی۔

-23مکرمہ امۃ الرشید صاحبہ اہلیہ مکرم شیخ مشہود احمد صاحب (نیروبی۔سابق صدر مجلس انصار اللہ ونیشنل سیکرٹری امور عامہ کینیا)

7 مئی 2021ءکو وفات پا گئیں۔ نیشنل عاملہ لجنہ اماءاللہ کینیا میں خدمت کی توفیق پائی۔ مرحومہ مکرم شیخ شاہد احمد صاحب( صدر جماعت کیمبرج۔یوکے) اور مکرم سمیر احمد شیخ صاحب ( نائب امیر جماعت کینیا ) کی والدہ تھیں۔

-24مکر م شمس الحق خان صاحب معلم سلسلہ (پنشنر۔جماعت احمدیہ کیرنگ صوبہ اڈیشہ۔انڈیا)

12 مئی 2021ءکو وفات پا گئے۔ صوبہ اڈیشہ اور صوبہ بہار کی جماعتوں میں تعلیم وتربیت اور تبلیغ کا فریضہ نہایت خوش اسلوبی سے سرانجام دیتے رہے۔علمی ذوق رکھنے والے خادم سلسلہ تھے۔آپ نے اپنے پانچوں بیٹوں کو وقف کیا جو بطور مبلغین بھارت کے مختلف صوبوں میں خدمت کی توفیق پارہے ہیں۔ایک بیٹے مکرم قمر الحق خان صاحب نائب پرنسپل جامعہ احمدیہ قادیان ہیں۔مرحوم موصی تھے۔

-25مکرم عبد الحمید شاہد صاحب (سابق کارکن گیسٹ ہاؤس صدر انجمن احمدیہ۔ربوہ)

12مئی 2021ء کو وفات پا گئے۔ آپ نے لمبا عرصہ گیسٹ ہاؤس میں خدمت کی توفیق پائی۔

-26مکرمہ اشرفی بیگم صاحبہ(قادیان )

14 مئی 2021ءکو وفات پاگئیں ۔ 70 کی دہائی کے آغاز میں آگرہ کے علاقہ سے آکر قادیان میں رہائش اختیار کی۔

-27مکرمہ سکینہ بیگم صاحبہ اہلیہ مکرم عبدا لرحیم خان صاحب ( ربوہ۔حال کینیڈا)

16 مئی 2021ءکو وفات پا گئیں۔ آپ کے دو نسبتی بھائیوں مکرم ڈاکٹر عبد القدیر خان صاحب اور مکرم ڈاکٹر عبدالقدوس خان صاحب کو سندھ میں شہید کردیاگیا تھا۔

-28مکر مہ ارشاد بیگم صاحبہ(لاہور)

24 مئی 2021ءکو وفات پا گئیں۔ مرحومہ موصیہ تھیں۔لجنہ کے مختلف عہدوں پر خدمت کی توفیق پائی۔آپ کے سب سے بڑے بیٹے واقف زندگی ہیں اور جامعہ احمدیہ ربوہ میں خدمت کی توفیق پارہے ہیں۔

-29مکرم داؤد احمد بھٹی صاحب ( جرمنی)

مئی 2021ء میں وفات پا گئے۔ پچھلے پانچ سال سے بیت السبوح جرمنی کے کچن میں وقف عارضی کرکے خدمت کی توفیق پارہے تھے۔

-30مکرم داؤد احمد باجوہ صاحب(بیلجیم)

27 مئی2021ء کوبقضائے الہٰی وفات پا گئے ۔ گزشتہ تقریباً 25سال سے جماعت کے مختلف شعبہ جات میں خدمت کی توفیق پائی۔ انتہائی نیک، تہجد گزار، پنجوقتہ نمازوں کے پابند، سادہ مزاج اور خاموش طبع انسان تھے۔ مالی قربانی میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیتے تھے۔ مرحوم موصی تھے۔

اللہ تعالیٰ تمام مرحومین سے مغفرت کا سلوک فرمائے اور انہیں اپنے پیاروں کے قرب میں جگہ دے۔ اللہ تعالیٰ ان کے لواحقین کو صبر جمیل عطا فرمائے اور ان کی خوبیوں کو زندہ رکھنے کی توفیق دے۔آمین

٭…٭…٭

مزید دیکھیں

متعلقہ مضمون

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

For security, use of Google's reCAPTCHA service is required which is subject to the Google Privacy Policy and Terms of Use.

I agree to these terms.

Back to top button
Close