ارشادِ نبوی

ارشاد نبویﷺ

حضرت فضالہؓ روایت کرتے ہیں کہ آنحضرت صلی اللہ علیہ و سلم نے ایک شخص کو نماز میں دعا کرتے ہوئے سنا۔ نہ اُس نے اللہ تعالیٰ کی حمد و ثنا کی اور نہ آنحضرت صلی اللہ علیہ و سلم پر درود بھیجا۔ اس پر آپؐ نے فرمایا: اس نے جلد بازی سے کام لیا ہے اور صحیح طریق سے دعا نہیں کی۔ آپؐ نے اس شخص کو بلایا اور فرمایا: جب تم میں سے کوئی نماز میں دعا کرنے لگے تو پہلے اپنے ربّ کی حمد و ثنا کرے۔پھر نبیؐ پر درود بھیجے اس کے بعد حسبِ منشا دعا کرے۔

(ابو داؤد کتاب الصلوٰۃ باب الدعا)

متعلقہ مضمون

رائے کا اظہار فرمائیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

For security, use of Google's reCAPTCHA service is required which is subject to the Google Privacy Policy and Terms of Use.

I agree to these terms.

Back to top button
Close