رپورٹ دورہ حضور انور

اللہ تعالیٰ کی تائید و نصرت سے بھر پور یورپ کے تین ممالک کے دورے کے بعد مسجد مبارک، اسلام آباد میں ورودِ مسعود

(عبد الماجد طاہر۔ ایڈیشنل وکیل التبشیر لندن)

امیرالمومنین حضرت خلیفۃالمسیح الخامس ایّدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز کا دورۂ یورپ۔ ستمبر، اکتوبر2019ء

………………………………

27؍اکتوبر 2019ء بروز اتوار

……………………………………………

حضور انور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز نے صبح چھ بج کر پندرہ منٹ پر مسجد بشارت اوسنابروک میں تشریف لا کر نماز فجر پڑھائی۔

اپنے پیارے آقا کی اقتدا میں نماز ادا کرنے کے لیے احباب جماعت کی ایک بہت بڑی تعداد صبح چار بجے سے ہی مسجد پہنچنا شروع ہو گئی تھی۔ صبح ساڑھے چار بجے تک مسجد اور بیرونی احاطہ میں نصب مارکیز مرد و خواتین سے بھر چکی تھیں۔ ان سبھی نے حضور انور کی اقتدا میں نماز فجر ادا کی۔

نماز کی ادائیگی کے بعد حضور انور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز اپنی رہائش گاہ پر تشریف لے آئے۔
آج پروگرام کے مطابق یہاں سے براستہ برسلز (بیلجیم) اسلام آباد ، یوکے کے لیے روانگی تھی۔

حضور انور ایدہ اللہ تعالیٰ کو الوداع کہنے کے لیے احباب جماعت مرد و خواتین اور بچے بچیاں صبح سے ہی مسجد کے بیرونی احاطہ میں جمع ہونا شروع ہو گئے تھے۔ دس بج کر پندرہ منٹ پر حضور انور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز اپنی رہائش گاہ سے باہر تشریف لائے۔ پروگرام کے مطابق مجلس عاملہ جماعت اوسنابروک کے ممبران نے حضور انور کے ساتھ تصویر بنوانے کی سعادت پائی۔ مجلس اطفال الاحمدیہ اوسنابروک نے اس سال علم انعامی حاصل کیا تھا۔ انہوں نے اپنے علم انعامی کو تھامے ہوئے اپنے پیارے آقا کے ساتھ تصویر بنوانے کی سعادت پائی۔ اس دوران چھوٹے بچے ایک قطار میں کھڑے ہو چکے تھے۔ حضور انور نے از راہ شفقت ان بچوں کو چاکلیٹ عطا فرمائیں۔ اس کے بعد حضور انور خواتین کی طرف تشریف لے گئے اور بچیوں کو چاکلیٹ عطا فرمائیں۔ اس دوران خواتین شرف زیارت سے فیضیاب ہوئیں۔

حضرت امیر المومنین خلیفۃ المسیح الخامس ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز اوسنابروک سے روانگی کے وقت دعا کراتے ہوئے

دس بج کر تیس منٹ پر حضور انور نے دعا کروائی اور قافلہ برسلز (بیلجیم) کے لیے روانہ ہوا۔ جرمنی کی ایک گاڑی قافلہ کو Escortکر رہی تھی جبکہ باقی خدام کی گاڑیاں قافلہ سے پیچھے تھیں۔

اوسنا بروک (Osnabrück)سے بیلجیم کا فاصلہ 389 کلو میٹر ہے۔ جرمنی میں 94 کلومیٹر کا سفر طے کرنے کے بعد بارڈر کراس کر کے ملک ہالینڈ میں داخل ہوئے اور پھر ہالینڈ میں 195 کلو میٹر کا سفر طے کرنے کے بعد ملک بیلجیم کی حدود میں داخل ہوئے اور مزید 100 کلومیٹر کا سفر طے کرنے کے بعد دو بج کر بیس منٹ پر احمدیہ مشن ہاؤس بیت السلام (برسلز) تشریف آوری ہوئی۔

٭ بیلجیم کی مختلف جماعتوں سے آئے ہوئے احباب مردو خواتین اور نیشنل عاملہ کے ممبران نے اپنے پیارے آقا کا بڑا پُرجوش استقبال کیا۔ہر کوئی اپنے پیارے آقا کا دیدار کر کے خوشی و مسرت سے معمور تھا اور اپنے آقا کو خوش آمدید کہہ رہاتھا۔

٭ ملک مراکش سے تعلق رکھنے والے ایک بچے عزیزم انیس بساعی نے حضورانور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز کی خدمت میں پھول پیش کیے جبکہ عزیزہ عائشہ بشریٰ نے حضرت بیگم صاحب مد ظلہا اللہ تعالیٰ کی خدمت میں پھول پیش کیے۔

٭ جونہی حضورانور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز گاڑی سے باہر تشریف لائے تو امیرصاحب بیلجیم ڈاکٹر ادریس احمدصاحب، مبلغ انچارج بیلجیم حافظ احسان سکندر صاحب اور جنرل سیکرٹری جماعت بیلجیم اسد مجیب صاحب اور صدرخدام الاحمدیہ توصیف احمدصاحب نے حضورانور کو خوش آمدید کہا۔

٭ بعدازاں حضورانور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز مشن ہاؤس کے رہائشی حصہ میں تشریف لے گئے۔

٭ حضورانور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز نے 2بج کر 45 منٹ پر تشریف لاکر نمازِ ظہر و عصر جمع کرکے پڑھائیں۔ نمازوں کی ادائیگی کے بعد حضورانورایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیزرہائشی حصہ میں تشریف لے گئے۔

پروگرام کے مطابق چار بج کر دس منٹ پر حضور انور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز اپنے رہائشی حصہ سے باہر تشریف لائے۔

٭ مکرم امیرجماعت احمدیہ جرمنی عبد اللہ واگس ہاؤزر صاحب، مبلغ انچارج جرمنی مکرم صداقت احمدصاحب، جنرل سیکرٹری مکرم الیاس مجوکہ صاحب ، مکرم ڈاکٹر اطہر زبیرصاحب، مکرم عبداللہ سپراء صاحب اور مکرم صدرصاحب خدام الاحمدیہ نے اپنے خدام کی سیکیورٹی ٹیم کے ساتھ حضورانور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز سے مصافحہ کی سعادت حاصل کی۔

٭ جرمنی سے آنے والے خدام کی سیکیورٹی ٹیم نے اپنے پیارے آقا کے ساتھ گروپ تصاویر بنوانے کی سعادت پائی۔

٭ بعد ازاں حضور انور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز خواتین کی طرف تشریف لے گئے۔جہاں خواتین نے شرف زیارت کی سعادت پائی۔ چار بج کر بیس منٹ پر حضور انور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز نے اجتماعی دعا کروائی۔

٭ اس کے بعد پروگرام کے مطابق یہاں سے فرانس کی بندرگاہ Calaisکی طرف روانگی ہوئی اور چھ بج کر تیس منٹ پر چینل ٹنل(Channel Tunnel )آمد ہوئی۔ جرمنی سے ساتھ آنے والے احباب اور خدام کی سیکیورٹی ٹیم حضورانور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز کو چینل ٹنل تک چھوڑنے اور رخصت کرنے اور الوداع کہنے کے لیے قافلہ کے ساتھ ہی رہی۔اسی طرح بیلجیم سے امیرصاحب بیلجیم،مکرم اسد مجیب صا حب مبلغ سلسلہ و جنرل سیکرٹری، مکرم حافظ احسان سکندر صاحب مبلغ انچارج بیلجیم، راجہ عبداللطیف صاحب نیشنل سیکرٹری جائیداد،حامد محمود شاہ صاحب سابق امیر جماعت بیلجیم، ایک نومبائع عرب ادریس گربوز صاحب اور مکرم صدرمجلس خدام الاحمدیہ توصیف احمدصاحب حضورانور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز کو یہاں سے لندن کے لیے رخصت کرنے کے لیے قافلہ کیساتھ آئے۔

٭ پاسپورٹ، امیگریشن اور دیگر دستاویزات کی کلیئرنس کے بعد سات بج کر پندرہ منٹ پر قافلہ کی گاڑیاں ٹرین پر بورڈ(board)ہوئیں اور یہ ٹرین سات بج کربیس منٹ پر Calais سے برطانیہ کے ساحلی شہر Dover کی طرف روانہ ہوئی۔ قریباً 35 منٹ کے سفر کے بعد ٹرین چینل ٹنل کراس کر کے Dover کے قریب برطانیہ کی سرزمین میں داخل ہوئی اور اپنے مخصوص سٹیشن پر رُکی۔قریباً پانچ منٹ کے وقفہ کے بعد فرانس کے وقت کے مطابق آٹھ بجے اور برطانیہ وقت کے مطابق سات بجے قافلہ کی گاڑیاں ٹرین سے باہر آئیں اور موٹر وے پر سفر شروع ہوا۔ (برطانیہ کا وقت فرانس کے وقت سے ایک گھنٹہ پیچھے ہے)

٭ مکرم رفیق احمد حیات صاحب امیرجماعت یو۔کے، مکرم عطاء المجیب راشد صاحب مبلغ انچارج یو۔کے، مکرم مرزاناصرانعام صاحب پرنسپل جامعہ احمدیہ یوکے، مکرم مبارک احمد ظفرصاحب ایڈیشنل وکیل المال لندن، مکرم اخلاق احمد انجم صاحب (دفتر وکالت تبشیر، لندن) ،مکرم عبدالقدوس عارف صاحب صدر خدام الاحمدیہ یوکے، مکرم نصیرالدین ہمایوں صاحب (شعبہ حفاظت خاص ) مع سیکیورٹی ٹیم حضورانور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز کو خوش آمدید کہنے کے لیے موجود تھے۔

٭ تقریباً ایک گھنٹہ چالیس منٹ کے سفر کے بعد شام 8 بج کر 40منٹ پر اسلام آباد میں ورود مسعود ہوا جہاں احباب جماعت مردو خواتین کی ایک بڑی تعداد نے اپنے پیارے آقا کو اھلاً وسھلاً و مرحبا کہتے ہوئے خوش آمدید کہا۔ حضورانور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز کی رہائش گاہ کے بیرونی حصہ کو خوبصورت جھنڈیوں سے سجایا گیا تھا۔

٭ جونہی حضورانور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز گاڑی سے باہر تشریف لائے مکرم امیرصاحب یوکے رفیق احمد حیات صاحب اور مبلغ انچارج یوکے مکرم عطاء المجیب راشد صاحب نے حضورانور سے شرفِ مصافحہ حاصل کیا۔

٭ حضورانور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز نے ازراہِ شفقت اپنا ہاتھ بلند کر کے سب کو السلام علیکم کہا اور اپنی رہائش گاہ تشریف لے گئے۔

حضورانور ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز کی معیت میں جن خوش نصیب افراد کو اس سفر پر جانے کی سعادت نصیب ہوئی ان کے اسماء بغرض ریکارڈ درج ہیں:

حضرت سیدہ امتہ السبوح صاحبہ مد ظلہا اللہ تعالیٰ (حرم سیدنا حضرت خلیفۃ المسیح الخامس ایدہ اللہ تعالیٰ بنصرہ العزیز)

مکرم منیر احمد جاوید صاحب (پرائیویٹ سیکرٹری)
مکرم عابد وحید خان صاحب (انچارج پریس اینڈ میڈیا آفس لندن)
مکرم حماد مبین صاحب، مربی سلسلہ (دفترپرائیویٹ سیکرٹری)
مکرم سید محمد احمد ناصر صاحب ( نائب افسر حفاظت خاص لندن)
مکرم ناصراحمد سعید صاحب (شعبہ حفاظت)
مکرم سخاوت علی باجوہ صاحب (شعبہ حفاظت )
مکرم خواجہ قدوس صاحب (شعبہ حفاظت )
مکرم محموداحمدخان صاحب(شعبہ حفاظت )
مکرم مرزالئیق احمدصاحب (شعبہ حفاظت)
مکرم ابراہیم منیب احمدملہی صاحب (شعبہ حفاظت)
خاکسار عبدالماجد طاہر (ایڈیشنل وکیل التبشیرلندن)

٭ علاوہ ازیں مکرم ندیم احمد امینی صاحب،مکرم محمد احمد صاحب، مکرم عبدالرحمان صاحب اور مکرم رانا مقصود احمد صاحب کو قافلہ کی گاڑیاں ڈرائیو کرنے کی سعادت نصیب ہوئی۔

٭ ایم ٹی اے انٹرنیشنل (یوکے)کے درج ذیل ممبران نے اس دورے کے تمام خطباتِ جمعہ، ہالینڈ اور فرانس کے جلسہ ہائے سالانہ ، حضورانور کے انٹرویوز اورپریس کانفرنسز، مساجد کے افتتاح اور receptions کی مختلف تقاریب اور دیگر جملہ پروگراموں کی ریکارڈنگ اور live ٹرانسمشن کے لیے اس دورہ میں شمولیت کی سعادت پائی۔

1۔ مکرم منیر احمدعودہ صاحب
2۔ مکرم خواجہ سفیر الدین قمر صاحب
3۔ مکرم عدنان زاہد صاحب
4۔ مکرم ابرار بیگ صاحب
5۔ مکرم ذکی اللہ صاحب
6۔مکرم قمر احمد ظفرصاحب

٭ ایم ٹی اے کی ٹیم کے علاوہ شعبہ مخزن التصاویر سے مکرم غدیر احمد نے بھی اس دورہ میں شمولیت کی سعاد ت پائی۔

٭ دورہ کی کوریج کے لیے ریویو آف ریلیجنز، الحکم اور سہ روزہ الفضل انٹرنیشنل کی ٹیموں کو بھی کام کرنے کی توفیق ملی۔

٭ جرمنی سے ڈاکٹر اطہرزبیر صاحب اس سفر کے دوران بطور ڈاکٹر قافلہ کے ساتھ رہے۔

٭ ان احباب کے علاوہ جرمنی سے مکرم عبداللہ سپراء صاحب کو بھی اس سفر میں قافلہ کے ساتھ رہنے کی سعادت نصیب ہوئی۔

اللہ تعالیٰ ان سب احباب کے لیے یہ سعادت مبارک فرمائے۔ آمین

٭…٭…٭

مزید دیکھیں

متعلقہ مضمون

رائے کا اظہار فرمائیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close