متفرق شعراء

نئے سال کی مبارک باد

(مبارک احمد عابد)

بحضور حضرت خليفة المسيح الخامس ايدہ اللہ تعاليٰ بنصرہ العزيز

نئے سال کي مبارک باد

سورج نے نيا کرنوں کو انداز ديا ہے

گلدانِ زمانہ ميں نيا پھول سجا ہے

يوں وقت نے ہے اپنا قدم آگے بڑھايا

دنيا ميں نئے سال کا آغاز ہوا ہے

پھيلا ہے صبحِ نَو کا نيا نور چمن ميں

نَو خيز اجالے ہيں ہر اک کوہ و دمن ميں

عُمروں ميں تفاوت ہوا بدلے ہيں مہ و سال

تقويم ميں بھي فرق ہے صفحاتِ زمن ميں

آقا ہوں نئے سال کے لمحات مبارک

ہر جا پہ ہر اک گام ہوں دن رات مبارک

جو آپ کے آنگن ميں برستي رہے پريتم

ہر آن وہ خوشيوں کي ہو برسات مبارک

اے قافلہ سالار ترا عزمِ قيادت

يا سيّدي يہ نورفشاں تيري سيادت

اِمسال بھي يہ مہدئ دوران کي ضَو کي

کچھ اور بھي پھيلائے گي اس دنيا ميں جُودت

آقا يہ نيا سال ہو خوشيوں کا خزانہ

خوشبوئے خلافت سے مہک اٹھے زمانہ

ہر سمت ہو يوں امن و اماں، چاہتِ انساں

گائے يہ جہاں سارا اخوّت کا ترانہ

مزید دیکھیں

متعلقہ مضمون

رائے کا اظہار فرمائیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close